Taqaza e Mohabbat by Maham Mughal Novel Complete Pdf Download


Taqaza e Mohabbat by Maham Mughal Complete Online Urdu Novel in Pdf based on Teacher Student and Village Based Romantic Urdu Novel Downloadable in Free Pdf Format and Online Urdu Novels Reading in Mobile Free Pdf Complete Posted on Novel Bank.

Maham Mughal also written famous urdu novels in pdf. Tu Sham Hai Sakoon Ki Novel Triangle Love Story and Rude Hero Based Romantic Novel Download Pdf.

Novel Bank website present a best urdu novels in different catagories like vani based novels in pdf, age difference based free pdf urdu novels, forced marriage based urdu romantic novels free pdf download.

The website contains best romantic novels in urdu PDF form; the same goes for other genres.

This website is heaven for avid readers as they can not only download urdu novels in pdf but can easily read urdunovels online and top 10 urdu romantic novels.

The Urdu Novel Bank website contains the best layout and is relatively easy to use, even for an amateur. It has the best urdu novels collection, which include all the genres. Pdf free download novels.

دیکھو رفاقت خان تم جو بھی کہو لیکن یہ معاملہ یہاں ضرور آنے والا تھا کیونکہ گاؤں کا جرگہ ایسے کسی پہ ظلم نہیں ہونے دے سکتا، تمہیں قبول ہو یا نہ ہو چونکہ یہ ایک قتل کا معاملہ ہے اور اس کی سزا یہی ہے کہ جس کو تم بہو بنانے والے تھے اب وہ ونی بن کے آئے گی تمہاری حویلی۔

جرگے میں موجود ان کے سردار نے کہا جب ان کی بات سنتے حویلی کے لوگوں کے لب بھینچ لیے۔

یہ ہمارے گھر کا معاملہ ہے اور ہم اسے خود دیکھ لیں گے۔ وہ سرعت سے ان کے فیصلے کی نفی کرتا اٹھا۔

دیکھو برخوردار گاؤں کی کچھ روایات ہوتی ہیں۔ اس کی بات سردار کو ناگوار گزری تبھی وہ اس کو سختی سے کہنے لگے۔

میں نہیں مانتا ان روایات کو۔ ان کی بات ابھی باقی تھی جب وہ سرد لہجے میں بیچ میں ہی ٹوک گیا۔

ماننے یا نہ ماننے سے کچھ نہیں ہوتا سوائے اس کے کہ نا ماننے پہ یہ گاؤں چھوڑنا ہو گا، اگر یہاں ظلم ہوا تو ہم یہاں فیصلہ کرنے والے بیٹھے ہیں اور جرگے کا فیصلہ ہی آخری فیصلہ ہوگا لہذا ان کی بیٹی یہاں مقتول کے بھائی کے نکاح میں ونی آئے گی، باقی گاؤں کے اصولوں سے تو رفاقت بھی اچھے سے واقف ہے۔

وہ کچھ جتاتی ہوئی نظر رفاقت خان کو دیکھتے باور کرواتے اپنا فیصلہ ان کے گوش گزار گئے۔


Or

Post a Comment

0 Comments